Choose Your Language

النهر الخارج من عدن

ريتشارد دوكينز

كيف بدأت قنبلة الاستنساخ التي نسميها "الحياة" وما هو مستقبلها في العالم، أو بالأحرى في الكون؟ لمواجهة هذا اللغز القديم، كتب ريتشارد دوكينز هذا الكتاب بخفة دم مميزة وقدرة كبيرة على توضيح الظواهر المعقدة. وصفت النيويورك تايمز أسلوبه بأنه نوع الكتابة العلمية التي تجعل القارئ يحس أنه عبقري.

وهم الإله

ريتشارد دوكينز

ريتشارد دوكينز يختبر بصرامة وخفة دم كل أنواع الآلهة. من طاغية العهد القديم المهووس جنسيا، إلى صانع الساعات السماوي الألطف (لكن غير المنطقي) الذي كان مفضلا عند مفكري عصر الأنوار. ريتشارد دوكينز يدحض أكبر حجج الأديان ويبين أن احتمال وجود كائن ميتافيزيقي ضعيف للغاية. ريتشارد يبين عن طريق الأدلة التاريخية والمعاصرة كيف تتسبب الأديان في الحروب، تأجيج التعصب واغتصاب الطفولة. وهم الإله يقدم حجة دامغة أن الإيمان بالله ليس فقط خطأ، بل قد يكون فتاكا. الكتاب يقدم كذلك نظرة متفائلة عن مزايا اللاألوهية بالنسبة للفرد والمجتمع، كتقدير عجائب الكون بشكل أوضح وأصح مما يقدمه أي دين.

صانع الساعات الأعمى

ريتشارد دوكينز

صانع الساعات الأعمى يعتبر الكتاب الأساسي لفهم التطور اليوم. طور عالم اللاهوت ويليام بيلي في القرن الثامن عشر تشبيهه الشهير: صانع الساعات الماهر.
يقدم دوكينز في كتابه إجابة أنيقة تبين أن عملية الانتخاب الداروينية المعقدة عملية تلقائية وغير واعية. إذا أمكننا القول بأن الانتخاب الطبيعي يلعب دور صانع الساعات في الطبيعة، فهذا الصانع أعمى، يعمل دون أي بصيرة أو هدف.

عدن سے پھوٹتا دریا

رچرڈ ڈاکنز

ہم تہہ در تہہ پھیلنے والے جِس "بم" کو حیات کہتے ہیں، وہ کیسے پھُوٹا؟ اور وہ دُنیا میں، یا یُوں کہئے کائنات میں، کِس سِمت گامزن ہے؟ اپنی مخصُوص حِسِ طرافت اور پیچیدہ مُعاملات کی وضاحت کرنے کی قابلیت کو برُوِ کار لاتے ہوئے (نیُو یارک ٹائمز نے اُن کے اندازِ تحرِیر کے بارے میں کہا کہ "یہ اُس طرح کا سائنسی اندازِ تحرِیر ہے جو قاری کو اپنے تئیں دانِشمند سمجھنے کا حوصلہ دیتا ہے")، رِچرڈ ڈاکِنز اِس قدِیم راز سے نبرد آزما ہوتے ہیں۔

فریبِ خُدائی

رچرڈ ڈاکنز

ظرافت اور تفصِیل کے ساتھ، ڈاکِنز خُدا کا اُس کی ہر شکل میں مُعائنہ کرتے ہیں، جِنسیت کے خبط میں گِرفتار ظالِم سے لے کر روشن خیال مُفّکرِین کے پسندِیدہ قدرے بے ضرر (لیکن اُتنے ہی بے تُکے) آسمانی گھڑی ساز تک۔ وہ مذہبی دلائل کی احشا براری کرتے اور ایک حتمی ہستی کی حتمی غیر اَغلیت کا مُظاہِرہ کرتے ہیں۔ وہ دِکھاتے ہیں کہ مذہب کیسے جنگ کو دعوت دیتا ہے، تعصُب کو بڑھاوا دیتا ہے، اور بچّوں کے ساتھ بد سلُوکی کی راہ ہموار کرتا ہے؛ اور تارِیخی اور دورِ حاضِر کے ثبُوت و شواہِد سے اپنے دلائل کی پُشتہ بندی کرتے ہیں۔ فریبِ خُدائی اِس بات کے بارے میں ایک اہم مُقدِمہ تعمِیر کرتی ہے کہ خُدا پر یقِین نہ صِرف غلط ہے بلکہ شدِید حد تک مُضِرِ صحت بھی ہے۔ وہ فرد اور مُعاشرے کے لئے دہریت کے فوائد کے بارے میں نِشاط آور بصِیرت بھی فراہم کرتی ہے، جِس میں کائنات کے مُعجزات کی مذہب سے سے کہیں زیادہ شفّاف اور سچّی قدر دانی بھی شامِل ہے۔

دُنیا کا سب سے برا تماشا

رچرڈ ڈاکنز

ہمارے سکُولوں میں "ذہِین ترتِیب" کی تعلِیم دی جارہی ہے؛ مُعلِموں سے کہا جا رہا ہے کہ وہ نظریہِ اِرتقاء کے در پردہ "تنازعہ کی تعلِیم" بھی دیں۔ اصل میں کوئی تنازعہ نہیں ہے۔ ڈاکِنز شواہِد کی دبِیز تِہوں کو چھانتے ہیں ـــ قُدرتی اِنتخاب کے زِندہ نمُونوں سے لے کر حِجریہ کے ریکارڈ تک؛ اُن قُدرتی گھڑیوں سے لے کر جواِرتقاء کے وسِیع ادوار کا شُمار کرتی ہیں، ترّقی کی منازِل سے گُزرتے ہوئے جنین تک؛ سطح زمِین کی عماریات سے لیکر سالماتی جینیات تک ـــ اور اِس زاوئے کے حق میں ناقابِلِ شکست مُقدّمہ پیش کرتے ہیں کہ "ہم اپنے آپ کو حیات کے پھلتے پھُولتے درخت کی ایک نازُک ٹہنی پر بیٹھا پاتے ہیں، اور یہ کوئی حادثہ نہیں، بلکہ با ترتِیب اِنتخاب کے زریعئے ہونے والے اِرتقاء کا براہِ راست نتِیجہ ہے"۔

حقِیقت کا جادُو

رچرڈ ڈاکنز

ذہِین تخیلاتی تجربات اور حیران کُن حقائق سے بھر پُور یہ کِتاب حقِیقت کا جادُو قُدرتی مُظاہِر کی ایک حیران کُن حد تک وسِیع قطار کی وضاحت کرتی ہے: کائنات کِتنی پُرانی ہے؟ برِ اعظم کِسی آڑے کٹے مُعمے کے غیر مُنسلِک حِصے کیوں لگتے ہیں؟ سُونامی کیوں آتے ہیںَ؟ اِتنی وسِیع اقسام کے پودے اور جانور کیوں ہیں؟ پہلا آدمی کون تھا، یا پہلی عورت کون تھی؟ قُدرت کی کرشمہ سازی کی جادُوئی اور دیو مالائی وضاحتوں سے شرُوع کر کے ڈاکِنز ہر باب کے آخِر میں اُن کے پسِ پردہ کار فرما سائنسی حقائق کو بے نقاب کرتے ہیں۔

اندھا گھڑی ساز

رچرڈ ڈاکنز

عملِ اِرتقاء کو سمجھنے کے لئے اَندھا گھڑی ساز ایک بُنیادی مسودہ ہے۔ اَٹھاروِیں صدی کے عالِمِ دِین وِلیم پیلِی نے نظریہِ تخلِیق کے لئے یہ مشہُورِ زمانہ اِستعارہ اِیجاد کیا تھا: اندھا گھڑی ساز۔ اِس نام کی کِتاب میں رِچرڈ ڈاکِنزاِس اِستعارے کا ایک نفِیس جواب تراشتے ہیں اور یہ دِکھانے کی کوشِش کرتے ہیں کہ ڈاروِن کا قُدرتی اِنتخاب کا عمل بے خبر اور خُود کار ہے۔ اگر قُدرتی اِنتخاب قُدرت میں گھری ساز کا کِردار ادا کرتا بھی ہے تو وہ ایک اندھے گھڑی ساز سے زیادہ نہیں ــ جو پیش بِینی اور مقصدیت سے محرُوم ہے۔

نهری از عدن

ریچارد داوکینز

چگونه و کجای هستی بمبِ همتاسازی که آنرا «زندگی» مینامیم آغاز شد یا به عبارت دیگر، زندگی در جهان به کدامین سمت در حرکت است؟ با ذکاوتی خاص و توانایی نوشتاری در ساده کردن پدیده های پیچیده (نیویورک تایمز سبک وی را اینگونه توضیح میدهد «نوعی از شرح علمی که به خواننده حس نابغه بودن میدهد»)، ریچارد داوکینز در این کتاب با این معمای دیرینه روبرو میشود.

پندار خدا

ریچارد داوکینز

با دقت و ذکاوت، ریچارد داوکینز خدا را در تمامی اشکالش بررسی میکند. از حاکم ظالم عهد عتیق با وسواس جنسی اش تا شکل بی خطرتر (هرچند غیر منطقی) آن، ساعت سازی الهی که محبوب برخی متفکران روشنفکری بود. وی نیروی دلایل اصلی برای ادیان را گرفته و شدت نامحتمل بودن موجودی اعلی را نشان میدهد. وی با تحکیم نکاتش بوسیله مدراک تاریخی و معاصر، نشان میدهد که دین چگونه جنگ را تقویت میکند،تعصب را شدت میبخشد و کودکان را مورد آزار قرار میدهد. پندار خدا دفاع قانع کننده ای ارائه میکند که در آن اعتقاد به خدا نه تنها اشتباه است بلکه باالقوه نیز مرگبار است. این کتاب همچنین بینش نشاط بخشی از فضیلت های بیخدایی برای افراد و جامعه را ارائه میکند که حداقلِ آن فهمی شفاف تر و درست تر از شگفتی های دنیاست، بگونه ای که هیچ ایمانی توانایی ارائه آنان را ندارد.

با شکوه ترین نمایش روی زمین

ریچارد داوکینز

«آفرینش هوشمند» در مدارس مان تدریس میشود؛ از آموزگاران خواسته میشود تا «جدال» پنهان نظریه فرگشت را درس بدهند. هیچ جدالی وجود ندارد. داوکینز لایه های غنی مدارک علمی از مثال های زنده انتخاب طبیعی تا سرنخ های آن در بایگانی فسیل ها را بررسی میکند، از ساعت های طبیعی که دوران تاریخی را نشان میدهد که در آن فرگشت راه خود را در پیچیدگی رشد جنین میگذراند، از دگرگونی های زمین تا ژنتیک مولکولی – تا دفاع نفوذ ناپذیری را برای اینکه «ما خود را نشسته بر از شاخه ای کوچک در میان رشد و شکوفندگی درخت زندگی می یابیم و این یک تصادف نیست بلکه نتیجه منطقی فرگشت با انتخاب غیر تصادفی است.»

جادوی واقعیت

ریچارد داوکینز

مملو از حقایق اعجاب آور و معماهای فکری، جادوی واقعیت دامنه حیرت برانگیزی از پدیده های طبیعی را توضیح میدهد: هستی چند سال دارد؟ چرا قاره ها شبیه تکه های جدا شده پازل هستند؟ علت سونامی چیست؟ چرا این همه نوع گیاه و حیوان وجود دارد؟ اولین مرد یا زن که بود؟ با شروع از توضیحات اسطوره ای برای عجایب طبیعت، داویکنز حقایق علمی هیجان انگیز در پسِ این وقایع را آشکار میکند.

ساعت ساز نابینا

ریچارد داوکینز

امروزه ساعت ساز نابینا متن اصلی برای درک فرگشت است. در قرن هجدهم، الهیدان پالی استعاره ای معروف را برای آفرینش باوری ساخت: ساعت ساز ماهر. در ساعت ساز نابینا، ریچارد داوکینز برای نشان دادن اینکه مراحل پیچیده انتخاب طبیعی داروین غیرهوشیار و خودکار است، پاسخ زیبا و صریحی را طرح میکند. اگر بتوان گفت که انتخاب طبیعی نقش ساعت ساز را در طبیعت ایفا میکند، این نقش، ساعت سازی نابیناست که بدون هدف و بصیرت کارمیکند.

Sungai dari Eden

Richard Dawkins

Bagaimana bom replikasi yang kita sebut “kehidupan” bermula, dan di mana tujuannya di dunia, atau lebih tepatnya, di alam semesta? Menulis dengan gaya bahasa lucu yang khas dan kemampuan menjelaskan fenomena rumit (New York Times mendeskripsikan gaya bahasanya sebagai “jenis penulisan ilmu pengetahuan yang membuat pembaca merasa seperti genius”), Richard Dawkins menghadapi misteri kuno ini.

Delusi akan Tuhan

Richard Dawkins

Dengan teliti dan jenaka, Dawkins menyelidiki Tuhan dalam segala bentuknya, dari tiran yang terobsesi seks di Perjanjian Lama hingga Pembuat Arloji Ilahi, suatu versi lebih ramah (tetapi tetap tidak logis) yang disukai oleh beberapa pemikir Pencerahan. Dia membantai argumen-argumen utama untuk agama dan mendemonstrasikan ketidakmungkinan besar akan adanya suatu entitas tertinggi. Dia menunjukkan bagaimana agama mengobarkan perang, menghasut kebencian, dan menyiksa anak-anak, dan poin-poinnya ditopang dengan bukti historis maupun terkini. Delusi akan Tuhan berargumen secara meyakinkan bahwa kepercayaan akan Tuhan tidak hanya keliru tetapi mungkin juga fatal. Buku ini juga menawarkan wawasan menyegarkan mengenai manfaat ateisme bagi individu dan masyarakat, di antara lain suatu apresiasi yang lebih jernih dan benar mengenai keindahan mengagumkan alam semesta daripada yang dapat ditawarkan oleh agama apa pun.

Pertunjukan Paling Agung di Bumi

Richard Dawkins

“Rancangan Cerdas” (Intelligent Design) sedang diajarkan dalam sekolah-sekolah kita; para pendidik diminta agar “mengajarkan kontroversi” di belakang teori evolusi. Tidak ada kontroversi. Dawkins mengayak berbagai lapisan bukti ilmiah—dari contoh seleksi alam yang hidup hingga petunjuk dalam catatan fosil; dari jam alami yang menandai kala-kala sangat luas yang di sepanjangya evolusi mengurai hingga perincian terkecil embrio saat berkembang; dari tektonika lempeng hingga genetika molekuler—untuk berargumen secara tak terbantahkan bahwa “kita ternyata hinggap di atas satu ranting kecil di sebuah pohon kehidupan yang mekar dan subur, dan ini bukan kebetulan, melainkan konsekuensi langsung dari evolusi melalui seleksi non-acak.”

Pembuat Arloji yang Buta

Richard Dawkins

Pembuat Arloji yang Buta merupakan referensi utama untuk memahami evolusi saat ini. Pada abad ke-18, teolog William Paley mengembangkan suatu metafora terkenal untuk kreasionisme: metafora pembuat arloji yang terampil. Dalam Pembuat Arloji yang Buta, Richard Dawkins membentuk bantahan anggun yang menunjukkan bahwa proses kompleks seleksi alam Darwininian bersifat tidak sadar dan otomatis. Jika seleksi alam dapat dikatakan memainkan peran sebagai pembuat arloji di alam, seleksi itu buta—yakni, bekerja tanpa pengetahuan atau tujuan yang mendahului proses kerjanya.

Notice a translations error? Let us know!